&#1575

Discussion in 'Members Club' started by Bill Longley, Nov 21, 2008.

  1. Bill Longley

    Bill Longley SENIOR MEMBER

    Joined:
    Apr 15, 2008
    Messages:
    1,484
    Ratings:
    +0 / 902 / -0
    Country:
    Pakistan
    Location:
    Pakistan
    امریکی جاسوس طیارون کی طرف سے پاکستانی حدود کی خلاف ورزی روزانہ کا معمول بن گیا ہے۔ پاکستان کے بار بار احتجاج کے باوجو امریکہ اس بات پر ڈٹا ہوا ہے کہ وہ پاکستان مین القاعدا اور طالبان ٹارگٹس کو نشانہ بنائے گا۔ آئی سیف کے سربراہ جنرل میکینن نی نیٹو کے تھینک ٹینک اٹلانٹک کونسل مین لیکچر مین اس بات کا انکشاف کیا ہے کہ پاکستان اور امریکہ کے درمیان پاکستان کے قبائیلی اور بندوبستی علاقون پر حملون کے بارے مین انڈر سٹینڈنگ موجود ہے اور یہ حملے پاک امریکہ حکمت عملی کا نتیجہ ہین ۔ انھون نے اپنے لیکچر مین مزید کہا کہ یہ حملے ابھی اور برھین گے اور سردیون مین اوپریشن جاری رہے گا۔ دوسری طرف ایک پاکستانی دفتر خارجہ کے ترجمان محمد صادق نے ایک بیان مین کہا ہے کہ پاکستان امریکی حملون کا معملہ اقوام متحدا مین نہین اٹھائے گا۔​
     
  2. Bill Longley

    Bill Longley SENIOR MEMBER

    Joined:
    Apr 15, 2008
    Messages:
    1,484
    Ratings:
    +0 / 902 / -0
    Country:
    Pakistan
    Location:
    Pakistan
    and we say we are soverign and we will do any thing for protection of our soverignity and honor

    i am ashamed of this democratic govt

    mushy was much batter ;)